Pakistan will host the tri-series between South Africa and New Zealand in February 2025.

Pakistan will host the tri-series between South Africa and New Zealand in February 2025.

Pakistan host tri-series The last time Pakistan hosted the

was in October 2004, with Sri Lanka and Zimbabwe joining as the other two participating teams. Pakistan Cricket Board (PCB) Chairman Mohsin Naqvi met Cricket South Africa (CSA) Chairman Lawson Naidoo and New Zealand Cricket (NZC) Chairman Roger Towse ahead of the ICC meeting in Dubai. Pakistan host tri-series

The main topic of discussion was the organization of an ODI tri-series centered on Pakistan, New Zealand and South Africa, to be held just before the ICC Champions Trophy in Pakistan in February 2025.

Pakistan host tri-series After thorough deliberations the tri-series

was formally agreed upon and warmly accepted by the host nation and the participating member boards. Chairman PCB has also invited Roger Toews and Lawson Naidu to visit Pakistan. The last time Pakistan hosted the tri-series was in October 2004. In which Sri Lanka and Zimbabwe were joined as other two participating teams.

Chairman Mohsin Naqvi expressed his excitement about the upcoming event, calling it an important opportunity for Pakistan to host such a tournament after a long gap.

He thanked the NZC and CSA chiefs for their commitment to participate in the tri-series. Chairman Naqvi also expressed his eagerness to host the ICC Champions Trophy 2025, stressing the honor that Pakistan is welcoming the top eight ODI teams on its soil for this prestigious event.

The tri-series between Pakistan, South Africa and New Zealand will be an exciting event and after a long time Pakistan will host such a tournament. I would like to thank the heads of NZC and CSA for agreeing to participate in the tripartite series. The PCB is also looking forward to hosting the BICC Champions Trophy 2025 which will be a great pleasure for Pakistan to host the top eight ODI teams on its soil,” said Naqvi.

پاکستان نے آخری بار اکتوبر 2004 میں سہ فریقی سیریز

کی میزبانی کی تھی، جس میں سری لنکا اور زمبابوے دیگر دو شریک ٹیمیں تھے۔ پاکستان کرکٹ بورڈ (پی سی بی) کے چیئرمین محسن نقوی نے دبئی میں آئی سی سی اجلاس سے قبل کرکٹ ساؤتھ افریقہ (سی ایس اے) کے چیئرمین لاسن نائیڈو اور نیوزی لینڈ کرکٹ (این زیڈ سی) کے چیئرمین راجر ٹوسے سے ملاقات کی۔

پاکستان نے آخری بار اکتوبر 2004 میں سہ فریقی سیریز

بحث کا اہم موضوع پاکستان، نیوزی لینڈ اور جنوبی افریقہ کے درمیان ون ڈے سہ فریقی سیریز تھا، جو پاکستان میں آئی سی سی چیمپئنز ٹرافی سے عین قبل فروری 2025 میں منعقد ہونا تھا۔

مکمل غور و خوض کے بعد سہ فریقی سیریز

پر باضابطہ طور پر اتفاق کیا گیا اور میزبان ملک اور شریک ممبر بورڈز نے اسے گرمجوشی سے قبول کیا۔ چیئرمین پی سی بی نے راجر ٹووز اور لاسن نائیڈو کو بھی دورہ پاکستان کی دعوت دی ہے۔ پاکستان نے آخری بار اکتوبر 2004 میں سہ فریقی سیریز کی میزبانی کی تھی۔ جس میں سری لنکا اور زمبابوے کو دیگر دو شریک ٹیموں کے طور پر شامل کیا گیا تھا۔

چیئرمین محسن نقوی نے آنے والے ایونٹ کے بارے میں اپنے جوش و خروش کا اظہار کرتے ہوئے اسے ایک طویل وقفے کے بعد پاکستان کے لیے ایسے ٹورنامنٹ کی میزبانی کا ایک اہم موقع قرار دیا۔

انہوں نے سہ فریقی سیریز میں شرکت کے عزم پر NZC اور CSA کے سربراہوں کا شکریہ ادا کیا۔ چیئرمین نقوی نے آئی سی سی چیمپیئنز ٹرافی 2025 کی میزبانی کے لیے اپنی بے تابی کا اظہار کیا اور اس باوقار ایونٹ کے لیے ٹاپ آٹھ ون ڈے ٹیموں کو پاکستانی سرزمین پر خوش آمدید کہنے کے اعزاز پر زور دیا۔

پاکستان، جنوبی افریقہ اور نیوزی لینڈ کے درمیان سہ فریقی سیریز ایک دلچسپ ایونٹ ہو گا اور طویل عرصے کے بعد پاکستان ایسے ٹورنامنٹ کی میزبانی کرے گا۔ میں NZC اور CSA کے سربراہان کا سہ فریقی سیریز میں شرکت پر رضامندی کا شکریہ ادا کرنا چاہوں گا۔ پی سی بی بی آئی سی سی چیمپیئنز ٹرافی 2025 کی میزبانی کا بھی منتظر ہے جو پاکستان کے لیے اپنی سرزمین پر ٹاپ آٹھ ون ڈے ٹیموں کی میزبانی کرنا ایک بڑا اعزاز ہو گا،‘‘ نقوی نے کہا۔

Similar Posts

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *